بدی کی راہ سے مجھ کو ہٹادے یااللہ مطیع احمد مرسل بنادے یااللہ

رئیس احمد رئیس

بدی کی راہ سے مجھ کو ہٹادے یااللہ
مطیع احمد مرسل بنادے یااللہ

تمام عمر حقیقت کو یہ بیان کرے
مری زبان کو وہ حوصلہ دے یااللہ

جو میری نسلوں کا اب تک رہی ہے سرمایہ
دلوں میں پھر وہی الفت جگادے یااللہ

ہر ایک سمت جہالت کا بول بالا ہے
یہاں تو علم کی شمعیں جلادے یااللہ

تمام شہر میں، میں منفرد نظر آئوں!
تو میری ذات مثالی بنادے یااللہ

ہر ایک لمحہ ترا نام ہو زباں پہ مری!
تو مجھ کو اپنا دوانہ بنا دے یااللہ

ترے وجود کو تسلیم کرلیں منکر بھی!
کوئی تو معجزہ ایسا دکھادے یااللہ