دشت و چمن برگ و شجر

دشت و چمن برگ و شجر
رنگ و مہک پھول و ثمر
ربِّ جہاں!سب سے عیاں
تیرا ہنر! تیرا ہنر!
ارض و فلک شمس و قمر
لیل و ضحیٰ شام و سحر
قادر مرے سب ہیں ترے
زیرِ اثر، زیر اثر!
فیل و نمل مرغ و نحل
مخلوقِ جل‘ حشرات‘ تھل
ہر ایک پر تیری نظر
اے با خبر! اے باخبر
مہر و قمر نجم و شرر
جگنو شمع لعل و گہر
سب میں سدا تیری ضیا
ہے جلوہ گر، ہے جلوہ گر!
صحرا جبل برّ و بحر
جاگے غضب تیرا اگر
خلقت یہ تب ہو جا ئے سب
زیر و زبر، زیر و زبر!
یوسف حیات ریتھ پوری
ریتھ پور