دور کردے الٰہی سارے غم شاملِ حال کر تو اپنا کرم

گہرؔاعظمی

دور کردے الٰہی سارے غم
شاملِ حال کر تو اپنا کرم

توہی فتّاح و رافع و نافع
تو ہی مختار و شانِ لوح و قلم

تو سمیع الدعا ہے اے! معبود
تیری رحمت کے ملتجی ہیں ہم

باغِ رضواں کے ہم بنیں حقدار
سر پہ سایہ فگن ہو ابرِ کرم

ہم مسلماں ہیں استقامت دے
ہو ہمیشہ نگاہ سوئے حرم

سب کی سب تو دعائیں کر قبول
ہے دعائے گہرؔ بچشمِ نم