مالک دو جہاں تو بڑا مہرباں

حمد
مالک دو جہاں
تو بڑا مہرباں
تو ہے سب کا خدا
تو ہے سب سے بڑا
سب کے دل کی صدا
تو سب کا نگہباں
مالک دوجہاں

ہر جگہ تو ہی تو
ہر طرف کو بکو
کیا کریں جستجو
تو یہاں اور وہاں
مالک دو جہاں
تارے شمس و قمر
تیرے شام و سحر
ندیاں بحر و بر
اور زمیں آسماں
مالک دو جہاں
تو نہ آئے نظر
سب پہ تیری نظر
ہے تجھے سب خبر
سب کا تو رازداں
مالک دو جہاں

ظہیر رانی بنوری